خوشیاں اور انا

آج ہم انسان کی بنیادی ضرورت پر بات کرے گیں- کیا آپ خوشی کے طلب گار ھیں؟ اگر ہاں تو کیا آپ خوشیوں کے درمیان میں اپنی انا کا تاج تو نہیں لے اتے؟ کیا آپ جانتے ہیں خوشی کیا ہوتی ہے؟ خوشی ایک ایسی کیفیت کا نام ہے، جب انسان نہ صرف خود کا خیال رکھتا ہے اور آس باس کے لوگوں کی خوشی کا خیال رکھتے ہیں- اور سب آس پاس کے لوگ آپ کی خوشی میں شامل ہو کر خوش ہوتے ہیں- اس وقت جب کسی کے دل اور سر پے کوئی انا کا تاج نہ ہو بین اس وقت الله کے نور کی طوفے اس مفل میں انا شروں ہو جاتے ہیں اگر اس مفل میں کوئی گیر اخلاقی اور اسلام کے دائرے سے باہر کوئی بات نہ ہو رہی ہو- حقیقی خوشی درحقیقت خدا کا ایک توفہ ہے اور خدا اس بات پر بھی خوش ہوتا ہے کہ میری مخلوق سیدھی رہ پر ہے- اسی خوشی ہمیشہ اس وقت حاصل ہو سکتی ہے جب انسان اپنے نفس کو کابو کر لے اور الله کی رہ اختیار کے ہو-

الله ہم سب کو خوشیاں حاصل کرنے اور تقسیم کرنے کی توفیق اتا فرمائیں- آمین!

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s