انسان کا خوف

میں آج آپ سے انسان کے خوف پر بات کرنا چاہتا ھوں- مگر اس کے لیے میں ایک ابتباس کا سہارا لوں گا-

کسی نے علامہ اقبال سے پوچھا… "عقل کی انتہا کیا ہے…؟"
جواب ملا…"حیرت"…
پھر پوچھا گیا… "حیرت کی انتہا…؟"
جواب ملا…"عشق"…
"عشق کی انتہا کیا ہے…؟"
فرمایا… "عشق لا انتہا ہے… اس کی کوئی انتہا نہیں…"
سوال کرنے والے نے کھا… "لیکن آپ نے تو لکھا ہے… "تیرے عشق کی انتہا چاہتا ہوں"…
آپ نے مسکرا کر کہا…
"دوسرے مصرے میں اپنی غلطی کا اعتراف بھی کیا ہے کہ…"
"میری سادگی دیکھ کیا چاہتا ہوں"…

اس ابتباس پر میں نے شاعرنہ انداذ میں کچھ اس طرح اپنے خیالات کو قلم بند کیا-

ادب والوں کے ادب تو دیکھ ، کون کیا چاہتا ہے
اور مجھ کو دیکھ ، امتحان میں بھی دنیا چاہتا ھوں
(خاموش مسافر – ٢٠١٣-٠٦-٠٣)

ہم لوگ در حقیقت خوف زدہ لوگ ہیں کہ لوگ کیا کہیں گے؟ اور صرف اس سوال کی وجہ سے ہم ایک خاص سوچ سے باہر سوچنے کی کوشش نہیں کرتے- انسان الله کی ازار مخلوق ہے اور اس کو پورا اختیار ہے کہ وہ اپنے خیالات کا پورا اظہار کر سکیں- میں اس آزادی کی کچھ حدود وظہا کر دینا چاہتا ہوں اور اس کے لیے اقبال کے کلام کا سہارا لو گا-

جب عشق سکھاتا ہے آداب خود آگاہی
کھلتے ہیں غلاموں پر اسرار شہنشاہی

عطار ہو، رومی ہو، رازی ہو، غزالی ہو
کچھ ہاتھ نہیں آتا بے آہ سحر گاہی
(باب جبریل)

اور کچھ کلام جو میرے دل کے بہت قریب ہے اور انسان کے خوف کی زنجیروں توڑ کر آزاد انسان کی انتہا چاہتا ہوں تاکہ انسان اپنی ذات میں مجود اس عکس کو جن سکے جس کے دیدار کی خاطر انسان دیوانہ ہو چوکہ ہے-

ترے عشق کی انتہا چاہتا ہوں
میری سادگی دیکھ کیا چاہتا ہوں

ستم ہو کہ ہو وعدہ بے حجابی
کوئی بات صبر آزما چاہتا ہوں

یہ جنت مبارک رہے زاہدوں کو
کہ میں آپ کا سامنا چاہتا ہوں

ذرا سا تو دل ہوں مگر شوخ اتنا
وہی لن ترانی سنا چاہتا ہوں

کوئی دم کا مہمان ہوں اے اہل محفل
چراغِ سَحر ہوں، بُجھا چاہتا ہوں

بھری بزم میں راز کی بات کہہ دی
بڑا بے ادب ہوں، سزا چاہتا ہوں
(بانگ درا)

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s