تکلیف الله کی بہت بڑی نعمت ہے

میں آج اپنے دوست سے ملا اور اس کو کچھ اپنے مجودہ زندگی کے حوال سنا رہا تھا- جس پر اس نے بچوں سے پوری ہمدردی کا اظہار کیا جن کو میرا فلسفہ سنا پڑہتا ہے اور ان کے پاس کوئی چارہ نہیں ہے- مگر میں نہیں جانتا کہ اس نے بات کا روخ کیوں موڑا اور وقت کا ذکر کرنے لگا- اور بتانے لگا کہ اس نے اپنی ماں سے پوچھا کہ "وقت کیا ہے؟" اور جواب ملا انپڑہ ماں سے، "بیٹا جو تو مجھ سے بات کر رہا ہے یہی وقت ہے" اس جواب پر اس نے کہا یار وقت نہ ماضی ہے نا مستقبل پس وقت صرف حال ہے- جو ہے ابھی ہے-

اس بات کے مکمل ہوتے ہی میں یہ سوچنے لگا کہ نہ تو ماضی میرا ہے نہ مستقبل اور حال کسی حال نہیں- پس لوگوں کو خوشی اتا کر کے اپنوں کے اور کچھ خاص شخص کے دیے گے غموں کی قید سے نجات مل جاتی ہے- مگر میں ماضی میں بھی خالی ہاتھ لیے اکیلا تھا اور آج بہت سارے غموں کے ساتھ بھی اکیلا ہوں- ایسے انسان کا زندہ ہونا اور نہ ہونا کسی کے لیے کوئی معنی نہیں رکھتا-

پیچھلے سال جب میں کسی خاص شخس سے غم حاصل کیا تو یہ محسوس ہوتا تھا کہ اپنوں کا غم کوئی بڑا نہیں جس قدر اس خاص شخس نے مجھے غم دے دیا ہے- کچھ عرصے بعد کسی خاص شخص کا غم اس قدر بڑہ گیا کہ زندگی گزارنا مشکل سے مشکل تر ہوتا چلا گیا- اور ایک دن رب نے مجھ پر اپنا فضل کیا حادثے کی شکل میں جب مجھ کو ایسے لگ رہا تھا کہ رب نے میری موت کی دعا قبول کر لی ہو- مگر کچھ ریر کے بعد معلوم ہوا کہ در حقیقت رب نے ناقبلے برداشت زخموں کے درد کے ذریعے مجھے محبوب سے لگی چوٹ سے نجات دیلا کر سکون اتا کیا ہے- اور اس وقت رب نے زخموں کی تقلیف میں مجھے ساتھ دن رکھا جو مجھے سکون اتا کرتا رہا- اس وقت مجھے معلوم ہوا کہ تکلیف الله کی کتنی بڑی نعمت ہے- میں اپنے الفاظوں کا اختتام اپنے اس شعر سے کرنا چاہتا ہوں-

اے الله تو کسی کو کوئی غم نہ دے کبھی
اگر دے تو کبھی غم جدائی نہ دے کبھی

خاموش مسافر

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s